کشمیر:ہر جگہ فوج موجود، راستے مسدود، ادویات محدود، مظاہرے، جھڑپیں

کشمیر:ہر جگہ فوج موجود، راستے مسدود، ادویات محدود، مظاہرے، جھڑپیں

سری نگر(نیوزلیب) مقبوضہ وادی میں کرفیو کا 15 واں روز جاری ہے۔ چار ہزار سے زائد کشمیریوں کو گرفتار کرلیا گیا ہے۔ ہر جگہ فوج موجود ہیں، جس کی وجہ سے راستے مسدود ہو گئے ہیں، ادویات بالکل محدودہیں، کئی علاقوں میں مظاہرین کرفیو توڑ کر باہر نکل آئے اور قابض فوج کیساتھ جھڑپیں بھی ہوئیں۔

غیر ملکی خبر رساں ادارے کے مطابق وادی میں کرفیو کا 15 واں روز ہے۔ ریاست کا دنیا سے انٹرنیٹ اور فون کے ذریعے رابطہ منقطع ہے۔ پبلک سیفٹی ایکٹ کے تحت 4 ہزار سے زیادہ افراد کو حراست میں لیا گیا ہے۔ متنازع قانون کے تحت حکام کسی بھی شخص کو کم از کم دو سال تک مقدمہ چلائے بغیر حراست میں رکھ سکتے ہیں۔ حکومتی حراستی مراکز اور قید خانوں میں جگہ کم ہونے کی وجہ سے قیدیوں کو کشمیر سے باہر منتقل کیا جا رہا ہے۔