کرکٹ ورلڈکپ: انگلینڈ کیخلاف نیوزی لینڈ کی بیٹنگ جاری

کرکٹ ورلڈکپ: انگلینڈ کیخلاف نیوزی لینڈ کی بیٹنگ جاری

چیسٹرلی سٹریٹ(نیوزلیب ویب ڈیسک) آئی سی سی کرکٹ ورلڈکپ کے 41 ویں میچ میں انگلینڈ کے 306 رنز کے ہدف کے تعاقب میں نیوزی لینڈ کی بیٹنگ جاری ہے۔

نیوزی لینڈ کی اننگز۔۔۔۔
نیوزی لینڈ کی طرف سے اننگز کا آغاز مارٹن گپٹل اور ہینری نکولس نے کیا تاہم پہلے ہی اوور میں ہینری نکولس بغیر کوئی رنز بنائے فاسٹ باؤلر کرس ووکس کی گیند پر ایل بی ڈبلیو ہو گئے۔ اس وقت کیویز ٹیم نے ایک اوور میں 2 رنز بنا لیے ہیں۔ مارٹن گپٹل اور کپتان ولیمسن کریز پر موجود ہیں۔

انگلینڈ کی اننگز۔۔۔۔۔
انگلینڈ کی طرف سے ٹاس جیت کر پہلے بیٹنگ کا فیصلہ کیا گیا، اننگز کا آغاز جیسن روئے اور جونی بیرسٹو نے کیا، دونوں نے شروع سے ہی جارحانہ انداز اپنایا اور حریف باؤلرز کی ایک بھی نہ چلنے دی اور وکٹ کے چاروں اطراف خوبصورت شارٹس کھیلے۔

جیسن روئے 61 گیندوں پر 60 رنز بنا کر جیمی نیشام کا نشانہ بن گئے، دونوں اوپنرز نے 123 رنز کی پارٹنر شپ بنائی، اس دوران جونی بیرسٹو نے میگا ایونٹ کے دوران اپنی دوسری سنچری مکمل کی، اس سے قبل وہ بھارت کیخلاف بھی 111 رنز کی باری کھیل چکے تھے۔ انہوں نے تھری فیگر اننگز 95 گیندوں پر کھیلی۔

انگلینڈ کو دوسرا نقصان 31 اورز کی پہلی ہی گیند پر اٹھانا پڑا جب جوئے روٹ 24 سکور بنا کر بولٹ کی گیند پر وکٹ کیپر لیتھم کو کیچ دے بیٹھے۔ ون ڈاؤن بیٹسمین اور اوپنر بیرسٹو کے درمیان 71 رنز کی شراکت داری بنی۔ میٹ ہینری نے جونی بیرسٹو کی اننگز کا خاتمہ کیا۔ اوپنر نے شاندار 99 گیندوں پر 106 رنز بنائے، ان کی اس اننگز میں 15 چوکے اور ایک چھکا شامل تھا۔ اس کے بعد دیگر بیٹسمین قابل ذکر کارکردگی نہ دکھا سکے۔

وکٹ کیپر بیٹسمین جوز بٹلر کی اننگز 11 رنز تک محدود رہی اور بولٹ کا نشانہ بن گئے، 42 اوورز کی آخری گیند پر بین سٹوکس 11 سکور بنا کر ہینری کو کیچ دے بیٹھے، سپنر سینٹر نے ان کی وکٹ حاصل کی۔ کرس ووکس 4 رنز بنا سکے۔ بیٹسمین کا جیمی نیشام کی گیند پر ولیمسن کیچ تھاما۔ انگلش کپتان مورگن 40 گیندوں پر 42 رنز بنا کر پویلین لوٹے، فاسٹ باؤلر ہینری کی گیند پر سینٹر نے شاندار کیچ پکڑا۔ عادل رشید ٹم ساؤتھی کا شاندار یارکر نہ روک پائے اور 16 رنز بنا کر پویلین لوٹے۔

انگلش کی پوری ٹیم مقررہ اوورز میں 305 رنز بنا سکی۔ بولٹ، ہینری اور نیشام نے دو دو شکار کیے، سینٹر اور ساؤتھی کے حصے میں ایک ایک وکٹ آئی۔

آج کے میچ میں نیوزی لینڈ کی شکست کی صورت میں انگلینڈ فائنل 4 کی چوتھی ٹیم بن سکتا ہے، دوسری جانب نیوزی لینڈ شکست کے باوجود 11 پوائنٹس پر رہتے ہوئے محفوظ ہوگا۔ اگر آج نیوزی لینڈ انگلینڈ سے بڑے مارجن سے ہارے اور بعد میں پاکستان بنگلہ دیش سے بھی بڑے مارجن سے جیتے تب نیوزی لینڈ کی پوزیشن کو خطرہ ہوسکتا ہے۔

ٹاس جیتنے کے بعد انگلینڈ کے کپتان آئن مورگن کا کہنا تھا کہ پچ دوسری اننگز میں سلو ہو جاتی ہے، کوشش کریں گے بڑا اسکور کریں، بھارت کے خلاف میچ سے اعتماد ملا۔ نیوزی لینڈ کے کپتان کین ولیمسن کا کہنا تھا کہ ہم بھی بیٹنگ کرنا چاہتے تھے، کم ہدف کے لیے اچھی باؤلنگ کرنا ہوگی۔