ورلڈ‌ کپ 2019: پاکستان کی شان دار فتح، وزیر اعظم اور ڈی جی آئی ایس پی آر کی مبارک باد

ورلڈ‌ کپ 2019: پاکستان کی شان دار فتح، وزیر اعظم اور ڈی جی آئی ایس پی آر کی مبارک باد

ناٹنگھم(نیوزلیب)ورلڈ کپ 2019 کے اپنے دوسرے میچ میں پاکستان نے میزبان انگلینڈ کو 14 رنز سے شکست دے دی، جو روٹ اور جوز بٹلر کی سنچریاں بھی انگلینڈ کے کام نہ آسکیں، محمد حفیظ میچ کے بہترین کھلاڑی قرار پائے۔

تفصیلات کے مطابق ناٹنگھم میں کھیلے جانے والے میچ میں پاکستان کی جانب دئیے جانے والے 349 رنز ہدف کے تعاقب میں انگلینڈ کی ٹیم 9 وکٹوں کے نقصان پر 334 رنز بناسکی، وہاب ریاض نے تین وکٹیں حاصل کیں۔

انگلینڈ کی پہلی وکٹ 12 رنز پر گری جب شاداب خان نے جیسن رائے کو 8 رنز پر پویلین روانہ کیا، بیرسٹو 32 رنز بنا کر وہاب ریاض کی گیند پر سرفراز احمد کو کیچ دے بیٹھے۔

جو روٹ نے 9 رنز پر بابر اعظم کی جانب سے کیچ ڈراپ کیے جانے کے بعد 107 رنز کی شاندار اننگز کھیلی، کپتان اوئن مورگن کو 9 رنز پر محمد حفیظ نے بولڈ کیا۔

بین اسٹوکس 13 رنز بنا کر شعیب ملک کا شکار بنے، جوز بٹلر نے برق رفتار 103 رنز کی اننگز کھیلی، بٹلر کو محمد عامر نے آؤٹ کیا، معین علی 19 رنز پر ہمت ہار گئے۔

کرس ووکس 21 رنز بنا کر وہاب ریاض کی گیند پر سرفراز احمد کو کیچ دے بیٹھے، جوفرا آرچر نے ایک رن پر پویلین لوٹ گئے۔

پاکستان کے وہاب ریاض نے تین کھلاڑیوں کو پویلین کی راہ دکھائی، شاداب خان اور محمد عامر نے دو، دو وکٹیں حاصل کیں جبکہ محمد حفیظ کے حصے میں ایک وکٹ آئی۔

قبل ازیں ناٹنگھم میں کھیلے جانے والے میچ میں گرین شرٹس نے مقررہ اوورز میں 8 وکٹوں کے نقصان پر 348 رنز بنائے اور میزبان انگلینڈ کو جیت کے لیے 349 رنز کا ہدف دے دیا، بابر اعظم اور سرفراز احمد نے نصف سنچریاں اسکور کیں۔

قومی کرکٹ ٹیم کے اوپنرز فخر زمان اور امام الحق نے 82 رنز کا شاندار آغاز فراہم کیا، فخر زمان 36 رنز بنا کر معین علی کی گیند پر اسٹمپڈ آؤٹ ہوئے، امام الحق کو بھی 44 رنز پر معین علی نے پویلین روانہ کیا۔

بابر اعظم نے 63 رنز کی شاندار اننگز کھیلی، محمد حفیظ 62 گیندوں پر 84 رنز بنا کر نمایاں رہے، حفیظ کی اننگز میں 8 چوکے اور 2 چھکے شامل تھے۔

کپتان سرفراز احمد نے 55 رنز کی شاندار اننگز کھیلی انہیں ووکس نے آؤٹ کیا، آصف علی 14 رنز بنا کر کرس ووکس کا نشانہ بنے، شعیب ملک صرف 8 رنز بنا کر پویلین لوٹ گئے۔

وہاب ریاض کو 4 رنز بنا کر کرس ووکس نے آؤٹ کیا، حسن علی اور شاداب خان 10، 10 رنز بنا کر ناٹ آؤٹ رہے۔

انگلینڈ کے کرس ووکس نے 3 کھلاڑیوں کو پویلین کی راہ دکھائی، معین علی نے بھی تین وکٹیں حاصل کیں، مارک ووڈ نے دو وکٹیں لیں۔

قبل ازیں انگلینڈ نے پاکستان کے خلاف ٹاس جیت کر فیلڈنگ کا فیصلہ کر لیا تھا، انگلش کپتان کا کہنا ہے کہ پچ اچھی لگ رہی ہے، باؤنڈریز بھی چھوٹی ہیں۔

انگلش کپتان اوئن مورگن کا کہنا ہے کہ کوشش کریں گے پاکستان کو کم رنز پر روکیں، ٹیم میں مارک ووڈ کو شامل کیا گیا ہے۔

دوسری طرف پاکستان ٹیم میں 2 تبدیلیاں کی گئی ہیں، حارث سہیل اور عماد وسیم کی جگہ شعیب ملک اور آصف علی کو ٹیم میں شامل کیا گیا ہے۔

کپتان سرفراز احمد نے کہا کہ ٹاس جیت جاتے تو پہلے بولنگ ہی کرتے، پچ اچھی ہے، کوشش کریں گے اچھا کھیلیں اور اچھا اسکور کریں۔

پاکستان ٹیم کے کپتان کا کہنا تھا کہ ویسٹ انڈیز کے خلاف میچ بھلا کر اچھا کھیلیں گے، خیال رہے کہ پاکستان نے اپنا پہلا میچ ویسٹ انڈیز کے مقابل ہار دیا تھا۔

31 مئی کو کھیلے گئے میں ویسٹ انڈیز نے پاکستان کو 7 وکٹوں سے شکست دی، پاکستان کی جانب سے دیا جانے والا 106 رنز کا ہدف، پاکستان کا ورلڈ کپ میں دوسرا کم ترین اسکور تھا جسے ویسٹ انڈین ٹیم نے 13.4 اوورز میں 3 وکٹوں کے نقصان پر پورا کر لیا۔

یہ ایونٹ کا چھٹا میچ ہے، دونوں ٹیمیں اپنا ایک ایک میچ کھیل چکی ہیں جس میں انگلینڈ کو کام یابی اور پاکستان کو ناکامی کا سامنا کرنا پڑا۔

وزیر اعظم پاکستان عمران خان اور ڈی جی آئی ایس پی آر کی جانب سے گرین شرٹس کو تاریخی فتح پر مبارک باد دی گئی.