بھارت کی پاکستان سے سفارتی تعلقات معمول پر لانے کی درخواست

بھارت کی پاکستان سے سفارتی تعلقات معمول پر لانے کی درخواست

اسلام آباد(نیوزلیب) پاکستان کی جانب سے سفارتی تعلقات محدود کرنے پر بھارتی حکومت کے ہوش ٹھکانے آگئے، بھارت نے پاکستان سے سفارتی تعلقات معمول پر لانے کی درخواست کر دی۔

غیر ملکی خبر ایجنسی کے دعویٰ کے مطابق بھارتی وزارت خارجہ نے کہا ہے کہ بات چیت کا راستہ کھلا رکھنا چاہیئے، پاکستان اپنے فیصلے پر نظر ثانی کرے۔

یاد رہے مقبوضہ کشمیر کی صورتحال کے بعد گزشتہ روز وزیراعظم کی زیر صدارت قومی سلامتی کمیٹی کے اہم اجلاس میں کئے گئے فیصلے کی روشنی میں بھارتی ڈپٹی ہائی کمشنر کو دفتر خارجہ طلب کر کے اجے بساریہ کی ملک بدری کے فیصلے سے آگاہ کیا کہ حکومت پاکستان نے بھارتی ہائی کمشنر اجے بساریہ کو ملک چھوڑنے کا حکم دیا ہے۔

یہ بھی فیصلہ کیا گیا کہ پاکستان نامزد ہائی کمشنر معین الحق کو نئی دہلی نہیں بجھوائے گا۔ پاک، بھارت دو طرفہ تجارت بھی معطل کر دی گئی ہے۔ سفارتی ذرائع کے مطابق اجے بساریہ پاکستان میں ایک سال 7 ماہ 25 دن تعینات رہے۔