اسٹاک مارکیٹ میں7روز میں11ہزار پوائنٹس کی کمی

اسٹاک مارکیٹ میں7روز میں11ہزار پوائنٹس کی کمی

کراچی(نیوزلیب)اپریل کے بعد مئی میں بھی پاکستان اسٹاک ایکسچینج میں مندی کی لہربرقرارہے، سات روزمیں انڈیکس میں گیارہ سو اسی پوائنٹس کی کمی ریکارڈ کی گئی جبکہ آج بھی کاروبار اتار چڑھاو دیکھنے میں آیا۔

تفصیلات کے مطابق پاکستان اسٹاک ایکسچینج میں مئی کے دوسرے ہفتےمیں بھی مندی کی لہر برقرار ہے ، کاروباری ہفتے کے پہلے روز بھی انڈیکس میں پانچ سوسترہ پوائنٹس کی کمی ریکارڈ کی گئی اور انڈیکس پھرتین سال کی کم ترین سطح کےقریب آگیا۔

ہنڈریڈ انڈیکس چھتیس ہزار پوائنٹس کی سطح برقرارنہ رکھا سکا جبکہ مئی کے پہلے ہفتے میں بھی انڈیکس میں ایک ہزار پوائنٹس سے زائدکی مندی دیکھی گئی۔

ماہرین کےمطابق معاشی فرنٹ پربےیقینی،شرح سوداوربجلی گیس کی قیمتوں میں اضافے،آئی ایم ایف پروگرام کی سخت شرائط اور روپےکی قدر میں ممکنہ کمی کے باعث سرمایہ کار پریشان ہیں۔

اپریل میں بھی اسٹاک مارکیٹ کافی خراب رہی، گزشتہ ماہ انڈیکس میں اٹھارہ سو پینسٹھ پوائنٹس کی کمی ریکارڈکی گئی جوکہ چودہ سال کی بدترین سطح ہے۔

پاکستان اسٹاک مارکیٹ میں اپریل کے آخری ہفتے مین ایک دن میں 100 انڈیکس میں 1.9 فیصد کی نمایاں کمی دیکھی گئی۔ انڈیکس نیچے جانے کے بعد شیئرز کی قیمت کم ہونے سے سرمایہ کاروں کے 110 ارب ڈوب گئے۔

اپریل میں غیرملکی سرمایہ کاروں نےاسٹاک مارکیٹ سے سولہ ارب چودہ کروڑچورانوئے لاکھ روپےکا سرمایہ نکال لیا۔